10

محققین کا زیتون کا درخت 7000 سال قبل اگائے جانے کا انکشاف

وادی اردن(نیوزمارٹ ڈیسک ایک نئی تحقیق میں معلوم ہوا ہے کہ زیتون کا درخت سب سے پہلے 7000 سال قبل ا±گایا گیا تھا۔تل ابیب یونیورسٹی اور یروشلم کی ہیبریو یونیورسٹی کے محققین کا کہنا ہے کہ وادی اردن کے علاقے تل ساف سے ملنے والی چارکول کی باقیات کا تجزیہ کرنے کے بعد پتہ چلتا ہے کہ یہ زیتون کے درختوں سے آئی ہیں۔محققین نے اندازہ لگایا ہے کہ زیتون کے درخت وادی اردن میں قدرتی طور پر نہیں ا±گتا، اس لیے وہاں کے رہائیشیوں نے ان درختوں کو قصداً ا±گایا ہوگا۔ تل ابیب یونیورسٹی کے شعبہ آثارِ قدیمہ کی رہنما مصنفہ ڈاکٹر ڈیفنا لینگٹ نے ایک بیان میں کہا کہ لکڑی قدیم دنیا میں پلاسٹک کی طرح تھی۔ یہ تعمیر، اوزار اور توانائی کے ذریعے استعمال کی جاتی تھی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں