10

صحافی نے ایسی کیا بات کر دی جس سے ادارے ڈر گئے، چیف جسٹس اطہر من اللہ

اسلام آباد(نیوزمارٹ ڈیسک) صحافیوں کے خلاف ایف آئی اے کے نوٹسز کے خلاف کیسز پر سماعت کے دوران چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ نے ریمارکس دیے کہ صحافی سمیع ابراہیم نے ایسی کیا بات کردی کہ جس سے ادارے ڈر گئے۔تو ایف آئی اے کو آدھا پاکستان اٹھانا پڑے گا۔عدالت کا ایف آئی اے حکام سے مکالمے میں عدالت نے کہا کہ اب ایف آئی اے کا اپنا امتحان ہے کہ عدالت کو مطمئن کرے کہ سمیع ابراہیم نے کیا جرم کیا ہے، ادارے اپنے کردار سے عزت کماتے ہیں، اداروں کو آپ کی ایف آئی آر کی ضرورت نہیں، اس عدالت کو مطمئن کریں یہ جرم کیسے بنتا ہے۔عدالت نے ایف آئی اے کو جواب کے لیے مہلت دیتے ہوئے کیس کی سماعت 20 ستمبر تک ملتوی کر دی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں