10

کالعدم ،TTP سے مذاکرات‘ فیصلہ پارلیمان کے سپرد

اسلام آباد( نیوزمارٹ ڈیسک) قومی سلامتی کی پارلیمانی کمیٹی نے فیصلہ کیا ہے کہ کالعدم تحریک طالبان پاکستان (ٹی ٹی پی) کے ساتھ مذا کرات پر پارلیمنٹ کو اعتماد میں لیا جا ئے گا حتمی فیصلہ اتفاق رائے سے ہو گا ،وفاقی وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ کا کہناہے کہ پارلیمنٹ کی اونرشپ سے ٹی ٹی پی سے مذاکرات کو آگے بڑھایا جائے گا، مذاکرات امن کے لیے اور آئین کے تحت ہوں گے۔ وزیراعظم شہبازشریف کی زیرصدارت قومی سلامتی سے متعلق اہم اجلاس بدھ کو منعقد ہوا جس میں قومی، جس میں حکومتی قیادت میں سول اور فوجی نمائندوں پر مشتمل کمیٹی نمائندگی کرتے ہوئے آئین پاکستان کے دائرے میں بات چیت کررہی ہے جس پر حتمی فیصلہ آئین پاکستان کی روشنی میں پارلیمنٹ کی منظوری، مستقبل کے لئے فراہم کردہ راہنمائی اور اتفاق رائے سے کیاجائے گا۔ سیاسی قیادت نے معاملات سے نمٹنے کی حکمت عملی اور اس میں پیش رفت پر اطمینان کا اظہار کیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں