14

مقبوضہ کشمیر: 5اگست2019کے بعدسے اب تک 662کشمیری شہیدہوئے

سرینگر(آئی پی ایس)غیر قانونی طورپربھارت کے زیر قبضہ جموںوکشمیر میں مودی کی فسطائی بھارتی حکومت کی طرف سے 5اگست2019کو جموں وکشمیر کی خصوصی حیثیت کی منسوخی کے غیر قانونی اقدام کے بعد مقبوضہ علاقے میں کشمیریوں کے ماورائے قتل ،جبری گرفتاریوں، املاک کی تباہی اور انسانی حقو ق کی سنگین پامالیاں میں تشویشناک حد تک اضافہ ہوا ہے ۔کشمیر میڈیا سروس کے ریسرچ سیکشن کی طرف سے آج ہندوتوا بھارتی حکومت کے یکطرفہ اور غیر قانونی اقدام کو تین برس مکمل ہونے کے موقع پرجاری کی گئی ایک رپورٹ میں کہا گیا کہاس عرصے کے دوران بھارتی فوجیوں نے 13خواتین سمیت 662کشمیریوںکو شہید کیا۔رپورٹ کے مطابق کل جماعتی حریت کے سینئر رہنما محمد اشرف صحرائی سمیت درجنوں کشمیری اس دوران بھارتی پولیس کی حراست کے دوران شہید ہوئے۔ مقبوضہ علاقے میں وحشیانہ بھارتی اقدامات کا نوٹس لے اور مسئلہ کشمیر کے اقوام متحدہ کی قرار دادوں کے مطابق حل کیلئے بھارت پر دباﺅ ڈالے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں