93

صدرنے ایوان زیریں کو تحلیل کردیا ،نومبر میں نئے انتخابات کا اعلان

کھٹمنڈو(ویب ڈیسک)نیپال کی صدر بدیا دیوی بھنڈاری نے نئی حکومت کی تشکیل کے امکانات ختم ہونے کے بعد ایوان نمائندگان کو تحلیل اور 12 اور 19 نومبر کو نئے انتخابات کا اعلان کیا ہے۔صدارتی دفترسے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ صدر بدیا دیوی بھنڈاری نے وزیر اعظم کے پی شرما اولی کی سفارش پر ملکی آئین کے آرٹیکل 76 (7) کے تحت ایوان نمائندگان کو تحلیل اور 12 اور 19 نومبر کو وسط مدتی انتخابات کا اعلان کیا ہے۔وزیراعظم کی جانب سے اعتماد کا ووٹ حاصل کرنے میں ناکامی یا نئے وزیر اعظم کی نامزدگی نہ ہونے کی صورت میں نیپالی آئین کے آرٹیکل 76 (7) کے تحت وزیر اعظم کی سفارش پر صدرایوان زیریں کو تحلیل کرنے اور نئے انتخابات کے انعقاد کے اعلان کا پابند ہے۔اولی نے جمعہ کی شب ایوان نمائندگان کو تحلیل کرنے کی سفارش کے لئے اپنی کابینہ کا ہنگامی اجلاس طلب کیا تھا ، کیوں کہ صدر اس بات پر پہنچے تھے کہ اولی اور نیپالی کانگریس کے صدر شیر بہادر دیوبا نئی حکومت بنانے کے لئے کوئی جائز دعوی پیش کرنے میں ناکام رہے ہیں۔۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں