13

ایچ ای سی ، قراقرم یونیورسٹی میں چائنہ سٹیڈی سنٹرکیلئے 1 کروڑ روپے منظور

گلگت(پناہ ڈیسک) ہائیرایجوکیشن کمیشن آف پاکستان نے قراقرم یونیورسٹی میں چائنہ سٹیڈی سنٹر کے قیام کی منظوری دیتے ہوئے ابتدائی طور پر سنٹر کے لیے ایک کروڑ روپے منظور کرلیا۔ڈائریکٹوریٹ آف پبلک ریلیشنز کے مطابق اس تین سالہ پراجیکٹ میں کام کرنے کے لیے ہائیرایجوکیشن کمیشن یونیورسٹی تین کروڑ روپے دے گی۔جامعہ قراقر م اس سنٹر کے ذریعے سی پیک کے تناظر میں چائنہ کے ساتھ تعلیمی وتحقیقی روابط بڑھانے سمیت اساتذہ طلبا ایکسیچنچ پروگرام،باہمی اشتراک سے مختلف ٹریننگ،کانفرنسز کے انعقاد اور ورکشاپس کرانا شامل ہیں۔پاکستان بھر میں اپنی نوعیت کا پہلا سٹیڈی سنٹر ہے۔جو قراقرم یونیورسٹی میں بنایا جارہاہے۔اس ضمن آج سنٹر کی ایڈوائزی کمیٹی کا اجلاس زیر صدارت وائس چانسلر قراقرم پروفیسر ڈاکٹر عطاء اللہ شاہ نے منعقد ہوئی۔ڈائریکٹوریٹ آف پبلک ریلیشنز کے مطابق اجلاس میں اس پراجیکٹ کی کامیابی کے لیے مضبوط منصوبہ بندی پرزور دیاگیا۔اجلاس میں وائس چانسلرنے کہاکہ سی پیک کے ذریعے جہاں ایک طرف سٹرکوں اور ریلوے نیٹ ورک کو بہتر بنایاجائے گاوہی پر ٹیکنالوجی،تعلیم وتحقیق کے حوالے سے راہداری بنائی جائے گی۔اس ضمن میں جامعات کا کردار اہم ہے۔کہ وہ چائینہ کے جامعات سے روابط بڑھاکرتعلیم وتحقیق کے فروغ کے لیے کام کریں۔اس وقت قراقرم یونیورسٹی چائنہ کنشورشیشم یونیورسٹیز میں شامل ہیں۔اس طرح قراقرم یونیورسٹی نارتھ ایسٹ کنشورشیشم جامعات میں بھی شامل ہے۔وائس چانسلر نے کہاکہ اس سنٹر کا بہت جلد باقاعدہ ڈائریکٹر تعینات کیاجائے گا۔اس وقت تک ایڈوائزری کمیٹی کے ماتحت کام کریگا۔جس کی صدارت وائس چانسلر خود کرینگے۔اور ڈاکٹر محفوظ اللہ ڈار سنٹر کا فوکل پرسن ہوگا۔جو اس سنٹر کے حوالے سے قلیل المدتی،درمیانی اور طویل المدتی پلاننگ بنائینگے۔اور مستقبل میں چائنہ سٹیڈی سنٹر کے لی علیحیدہ عمارت کا قیام بھی لایا جائے گا۔جس کے لیے فنڈنگ چائنہ حکومت کریگی۔وائس چانسلر اس موقع پر تمام سی پیک ریسرچ سنٹر کے ڈائریکٹر ڈاکٹر تصور رحیم بیگ اور ان کی پوری ٹیم کی کارکردگی کی تعریف کی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں