53

قومی سلامتی کاقانون ہانگ کانگ میں امن کی بحالی کیلئے موثر ثابت ہواہے:سیکیورٹی چیف

ہانگ کانگ (نیوزمارٹ ڈیسک) ہانگ کانگ میں گزشتہ تقریباً ایک سال سے نافذ العمل قومی سلامتی کاقانون امن وامان کی بحالی اورمقامی رہائشیوں کو2019 میں ہونے والی پرتشدد سرگرمیوں کے خوف سے چھٹکارا دلانے میں موثر ثابت ہوا ہے۔

ہانگ کانگ خصوصی انتظامی علاقے(ایچ کے ایس اے آر) حکومت کے سیکرٹری برائے سلامتی جان لی نے شِنہوا کو دئے گئے ایک انٹرویومیں کہا کہ ہانگ کانگ کے رہائشیوں نے بنیادی طور پر اپنی پرامن زندگی بحال کرلی ہے اور اس حوالے سے قانون کا اثر نمایاں رہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ لوگوں کو اپنے سیاسی نظریات کی وجہ سے حملوں یا ٹریفک کے مفلوج ہونے کا خوف نہیں رہا۔یہ کہنا صحیح ہوگا کہ ہانگ کانگ میں قومی سلامتی کے قانون نے انتشار کو ختم اورلوگوں کے لئے ایک پرامن اور خوشگوار زندگی کو پھر سے یقینی بنایا ہے۔

ایچ کے ایس اے آر حکومت کے سیکیورٹی سربراہ کا کہنا تھا کہ رواں سال کی پہلی سہ ماہی میں ہانگ کانگ میں جرائم کی شرح گزشتہ سال کے مقابلے میں تقریباً 10فیصد کم ہوئی جو2019 اور2020 میں بالترتیب 9.2 فیصد اور 6.8 فیصد اضافے کے بالکل برعکس ہے۔انہوں نے بتایا کہ تشدد اور ہانگ کانگ کی آزادی جیسی غیر قانونی سرگرمیوں میں نمایاں کمی واقع ہوئی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں