39

چلاس زیرو پوائنٹ پر بڑی گاڑیوں کی پابندی فوری ختم کروائیں

چلاس (نیوزمارٹ ڈیسک)چلاس زیرو پوائنٹ پر بڑی گاڑیوں کی پابندی فوری ختم کروائیں۔ روزانہ سیاحوں کا احتجاج معمول بن گیا ہے اور علاقے کی روایتی مہمان نوازی متاثر ہو رہی ہے آج پولیس دیامر نے آنسو گیس کا استعمال بھی کیا گرفتاریاں بھی کیں۔ شاہیراہ بابوسر ناران پہ ہر قسم کی گاڑیاں چل سکتی ہیں۔ ڈپٹی کمشنر دیامر نے غلط پابندی لگا کر سیاحت کو متاثر کر دیا ہے سیاحوں کی اکثریت اب بابوسر ٹاپ سے اس خدشے سے واپس ہورہی ہے کہ اگر گلگت بلتستان میں داخلہ ہوے تو واپسی اس شاہیراہ سے نہیں ہو سکتی۔ سیاحت کا شعبہ شدید متاثر ہو کر سیاحت سے وابستہ تاجر لوگ کا روزگار بند ہو رہا ہے۔دیامر کے علما اور عوام و ٹرانسپورٹرز نے اپیل کے ہے کہ زیرو پوائنٹ چیک پوسٹ پر سیاحوں کی ہرقسم گاڑیوں کو امدورفت کی چوبیس گھنٹے اجازتِ دی جاے۔ وزیر اعلی گلگت بلتستان اور چیف سیکرٹری اس مسئلے کا نوٹس لے ناران سے ہر قسم کی گاڑیاں اسی روڈ پر روزانہ چل رہی ہیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں