52

گلگت بلتستان کی تاریخ کا پہلا اور بڑا بجٹ پیش کرنے پر اپوزیشن اپنے ہوش و حواس کھو بیٹھی ہے، فتح الله خان

گلگت(پناہ نیوز ڈیسک) وزیر اطلاعات،منصوبہ بندی وترقی گلگت بلتستان فتح الله خان نے پیپلز پارٹی کی جانب سے عوام دوست اور تاریخی بجٹ کے حوالے سے جاری گمراہ کن بیانیہ پر اپنے ردعمل میں کہا ہے کہ وزیر اعلیٰ گلگت بلتستان اور پوری کابینہ کی جانب سے خطے کی تاریخ کا پہلا اور بڑا بجٹ پیش کرنے پر پیپلز پارٹی اپنے ہوش و حواس کھو بیٹھی ہے اور عوام میں اپنی گرتی ہوئی ساکھ کو بچانے کیلئے لاحاصل کوششوں میں لگی چکی ہے۔اس طرح کے بےبنیاد اور منفی پروپیگنڈے عوامی مفاد میں نہیں۔ان کا کہنا ہے کہ گلگت بلتستان کی عوام شعور رکھتے ہیں اور ماضی کی حکومتوں کی کاسہ لیسی اورجھوٹے دعوے نہیں بھولے ہیں۔عوامی اور جمہوری حکومت کی راگ الاپنے والی پارٹی عوام کی عدالت میں اپنا مقام کھو چکی ہے،عوام کے سامنے انکی کارکردگی صفر ہوکر رہ گئی ہے،اب کس منہ سے عوامی ہمدردی جتارہی ہے۔
صوبائی وزیر نے مزید کہا کہ ماضی کی حکومتوں نے آج تک کھربوں میں بجٹ پیش نہیں کیا۔اب جب ہماری حکومت نے ایک کھرب سے زائد کا میزانیہ پیش کیا تو ان کے ہوش و حواس اڑ گئے ہیں اور تاریخی بجٹ ان کو ہضم نہیں ہورہا اسلیئے کھسیانی بلی کھمبا نوچے کے مصداق واویلا شروع کر رکھا ہے۔ان کا یہ واویلا سعی لا حاصل کے علاؤہ کچھ نہیں۔
انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم پاکستان عمران خان نے گلگت بلتستان کے لیئے ایک عظیم ترقیاتی پیکیج کا نہ صرف اجراء کیا بلکہ جاری ترقیاتی پروگرامزکے فنڈز میں اضافہ اور غیر ترقیاتی گرانٹ میں 47 فیصد اضافہ کرکے گلگت بلتستان میں ایک نئی تاریخ رقم کی،جس پر عوام اور صوبائی حکومت ان کے مشکور ہیں۔صوبائی حکومت کے عوام دوست پالیسیوں کے باعث پیپلز پارٹی کے رہنما سخت ترین بدنیتی اور زہنی دباؤ کا شکار ہیں,ان کو ہمارا مشورہ ہے کہ مثبت اپوزیشن کا کردار ادا کریں اور گلگت بلتستان کی تعمیر و ترقی کے منازل میں صوبائی حکومت کے ساتھ چلیں اور تنقید برائے تنقید کے بجائے تنقید برائے اصلاح و تعمیر کے فارمولے پر عمل پیرا ہوں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں