125

سڑکوں کی تعمیر سے بلوچستان کے دور دراز علاقوں میں معاشی ترقی کا آغاز ہوگا،وفاقی وزیر برائے مواصلات مراد سعید

کوئٹہ(نیوزمارٹ ڈیسک)وفاقی وزیر برائے مواصلات مراد سعید نے بلوچستان میں شروع منصوبوں کی تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ سڑکوں کی تعمیر سے بلوچستان کے دور دراز علاقوں میں معاشی ترقی کا آغاز ہوگا، سی پیک کے ذریعے پورے خطے میں معاشی ترقی کی راہ ہموار ہوگی۔تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر برائے مواصلات مراد سعید نے پاکستان تحریک انصاف حکومت کے صوبہ بلوچستان میں شروع منصوبوں کی تفصیلات جاری کردیں۔مراد سعید کا کہنا تھا کہ بلوچستان کی ترقی پاکستان کی ترقی ہے، بلوچستان خوشحال ہوگا تو پاکستان خوشحال ہوگا۔ وزیر اعظم نے پسماندہ علاقوں کی ترقی اور خوشحالی کا وعدہ کیا اور پسماندہ علاقوں کی ترقی کے عملی اقدامات کیے۔وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ وزیر اعظم نے بلوچستان کی ترقی اور عوام کے مسائل پر خصوصی توجہ دی، انہوں نے بلوچستان کے کئی دورے کیے، دوروں میں انہوں نے بلوچستان کے معاملات میں ذاتی دلچسپی کا اظہار کیا۔انہوں نے منصوبوں کی تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ تحریک انصاف کی حکومت نے مغربی روٹ سی پیک کی منظوری دی، ژوب، کچلاک منصوبے کا آغاز کیا گیا۔ ہوشاب آواران 146 کلومیٹر شاہراہ کی تعمیر زور و شور سے جاری ہے۔ منصوبے اپنے مقررہ وقت سے 20 فیصد تیزی سے انجام دیا جا رہا ہے۔مراد سعید کا کہنا تھا کہ وزیر اعظم نے مغربی بائی پاس، ڈیرہ مراد جمالی بائی پاس کا سنگ بنیاد رکھا، کوئٹہ ویسٹرن بائی پاس منصوبے کی ویڈیو جاری کر دی گئی ہے۔ موڑ کچ ہرنائی 165 کلو میٹر شاہراہ، 198 کلو میٹر بسیمہ خضدار پر کام جاری ہے۔ بسیمہ خضدار شاہراہ بھی رواں سال دسمبر میں مکمل ہو جائے گی، منصوبوں کا سنگ بنیاد گزشتہ برس وزیر اعظم عمران خان نے رکھا تھا۔انہوں نے کہا کہ جل جو بیلہ منصوبے کا سنگ بنیاد وزیر اعظم آئندہ ہفتے رکھیں گے، کراچی چمن کوئٹہ خضدار منصوبے کے ایک سیکشن کی پروکیورمنٹ مکمل ہو چکی ہے، 330 کلو میٹر کے دوسرے سیکشن کے لیے اشتہار جاری کر دیا گیا ہے، دونوں سیکشن بی او ٹی کے تحت مکمل ہوں گے۔ سڑک کی طوالت 796 کلو میٹر ہے۔مراد سعید کا کہنا تھا کہ سڑکوں کے منصوبوں سے بلوچستان میں فاصلے کم ہوں گے، سڑکوں سے سیاحت کو فروغ ملے گا اور فصلیں بروقت مارکیٹ پہنچ سکیں گی۔ بلوچستان کے منصوبوں سے ملک کے دیگر حصوں سے رابطے بحال ہوں گے، ہزاروں لوگوں کو روزگار کے مواقع میسر آئیں گے۔انہوں نے مزید کہا کہ سڑکوں کی تعمیر سے بلوچستان کے دور دراز علاقوں میں معاشی ترقی کا آغاز ہوگا، سی پیک کے ذریعے پورے خطے میں معاشی ترقی کی راہ ہموار ہوگی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں