9

بلوچ طلبہ کو ہراساں کرنے کی شکایات کمیشن کے سامنے رکھنے کا حکم

اسلام آباد (نیوزمارٹ ڈیسک)اسلام آباد ہائی کورٹ نے بلوچ طلبہ کو ہراساں کرنے کی شکایات کمیشن کے سامنے رکھنے کا حکم دے دیا۔ہائی کورٹ کے چیف جسٹس اطہر من اللہ نے قائد اعظم یونیورسٹی اور دیگر تعلیمی اداروں کے بلوچ طلبہ کی ہراساں کرنے اور لاپتہ ہونے کے خلاف درخواستوں پر سماعت کی۔ درخواست گزاروں کی جانب سے وکیل ایمان حاضر مزاری عدالت کے سامنے پیش ہوئیں۔چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ کمیشن کی تشکیل کا نوٹیفکیشن کردیا گیا، ڈپٹی اٹارنی جنرل نے عدالت کو آگاہ کیا، اس کمیشن کی تشکیل کا مقصد یہ ہے کہ وہ تمام اسٹیک ہولڈرز کو سنے شکایات کا ازالہ کرے، بہت سارے کیسز میں دائرہ اختیار کے مسائل ہیں لیکن کمیشن اس کو دیکھ سکتا ہے۔عدالت نے کیس کی مزید سماعت دس جون تک ملتوی کردی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں