26

عمران پر حملہ سیدھا سادہ مذہبی انتہا پسندی کا کیس ہے، وزیر داخلہ

اسلام آباد (نیوزمارٹ ڈیسک ) وفاقی وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ نے کہا ہے کہ عمران خان سیاسی مخالف ہیں دشمن نہیں،حملہ انتہائی قابل مذمت ہے، اسدعمر نے بغیرتحقیق الزام لگایا، معاشرے میں تقسیم کا عمل گہرا کردیا گیا، ایسارویہ جمہوریت کیلئے بہت نقصان دہ ہے، پی ٹی آئی مارچ پر حملہ مذہبی انتہاپسندی کا واقعہ ہے، پی ٹی آئی کا رویہ کسی بڑے حادثے کا باعث بن سکتا ہے،عمران خان اپنے رویے کو بدلیں۔ رانا ثنا اللہ نے اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ عمران خان پر حملے کی شدید مذمت کرتے ہیں، عمران خان پر حملہ انتہائی تشویشناک ہے۔انہوں نے کہا کہ معاشرے میں تقسیم کے عمل کو گہرا کردیا گیا ہے، سوچنا ہوگا عدم برداشت کے رویے کو کس طرح ختم کیا جائے۔ پہلے ویڈیو بیان کے بعد تھانے کاعملہ معطل کر کےدوسری ویڈیو جاری ہوئی۔ وزیر داخلہ نے کہا کہ اس واقعے کی ایف آئی آر ابھی تک درج نہیں ہوئی، ایف آئی آر شاید مینج کرنے کی کوشش کی جارہی ہے جو قابل مذمت ہے، کل کے واقعے میں ملزم کو موقع سے گرفتار کیا گیا۔انہوں نے مزید کہا کہ ماحول خوشگوار ہو تو عمران خان کی عیادت کیلئے جایا جاسکتا ہے لیکن عمران خان نے الزام ہی ہم پر لگا دیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں