47

این او سی لئے بغیر ہی پلاٹوں کی فروخت اور ان پر تعمیرات شروع ، سی ڈی اے کے حکم پرتعمیراتی اور ترقیاتی کام روک دیا گیا ہے۔

اسلام آباد(ویب ڈیسک)اسلام آباد میں عوام کے کروڑوں روپے انویسٹ ہوجانے کے بعد سی ڈی اے کو آخر ہوش آہی گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق نجی ہاؤسنگ سوسائٹی کی جانب سے این او سی کے بغیر سینکڑوں پلاٹ بیچنے اور تعمیرات و ترقیاتی کام کئے جانے کا انکشاف کیا گیا ہے۔

نجی ہاؤسنگ سوسائٹی اسلام آباد ماڈل ٹاؤن نے21 ماہ قبل لے آؤٹ پلان مشروط طورپر منظور کروایا تھا اور 21 ماہ گزرجانے کے باوجود این او سی حاصل کرنے کے لیے مطلوبہ دستاویزات جمع نہیں کروایئں گئے جس کے نتیجے میں عوام کے کروڑوں روپے ڈوب چکے ہیں۔

واضح رہے کہ این او سی لئے بغیر ہی پلاٹوں کی فروخت اور ان پر تعمیرات بھی شروع کردیا گیا تھا لیکن اب سی ڈی اے کے حکم پر تمام تعمیراتی اور ترقیاتی کام روک دیا گیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں