33

قومی قیادت اور فوج کی مکمل توجہ بلوچستان پر ہے، آرمی چیف

راولپنڈی(نیوزمارٹ ڈیسک) پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کی جانب سے جاری کردہ بیان کے مطابق 7ویں بلوچستان نیشنل ورکشاپ کے شرکاء نے جی ایچ کیو راولپنڈی کا دورہ کیا جہاں انھوں نے آرمی چیف سے ملاقات کی۔

آئی ایس پی آر کے مطابق ورکشاپ کے شرکاء میں ارکان پارلیمنٹ، بیوروکریٹس، نوجوان، سول سوائٹی، میڈیا اور اکیڈیمیا کے ارکان شامل ہیں۔

آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ ورکشاپ کا مقصد مستقبل کی قیادت کو بلوچستان سمیت قومی اور صوبائی معاملات کے بارے میں بہتر آگاہی فراہم کرنا ہے۔

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے بلوچستان قومی ورکشاپ کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ قومی اور صوبائی سطح پر ریاستی اداروں کے ساتھ مل کر بلوچستان کی ترقی کیلئے کوشاں ہیں۔

آرمی چیف نے کہا کہ سیکیورٹی فورسز ہمیشہ ثابت قدم رہی ہیں اور بلوچستان، پاکستان کے امن و خوشحالی کے دشمنوں کو شکست دینے کے لیے پر عزم ہیں۔

جنرل قمر جاوید باجوہ نے یہ بھی کہا کہ سخت جدوجہد سےحاصل امن کے نتائج سامنے آرہے ہیں، صوبے میں سماجی اور اقتصادی ترقی کا عمل تیز کرنا ہوگا۔

آرمی چیف کا کہنا تھا کہ دیرپا استحکام کیلئے عوام کی بہتری کی حکمت عملی اختیار کرنی چاہیے، سیکیورٹی فورسز، بلوچستان اور پاکستان کے دشمنوں کو شکست دینے کیلئے چوکنا ہے۔

شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے زور دیا کہ موجودہ خطرات میں جامع قومی ردعمل کی ضرورت ہے، قومی قیادت اور فوج کی مکمل توجہ بلوچستان پر ہے۔

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا مزید کہنا تھا کہ قوم امن واستحکام کی راہ میں ہر مشکل گھڑی میں ثابت قدم رہی، بلوچستان میں امن اور استحکام سے پاکستان میں ترقی ہوگی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں